حلیم عادل شیخ کی انصاف ہائوس میں اہم پریس کانفرنس

sample-ad

پی ٹی آئی مرکزی رہنما و پارلیمانی لیڈر سندھ، حلیم عادل شیخ نے انصاف ہاوس کراچی میں رکن سندھ اسمبلی ڈاکٹر سعید آفریدی، علی عزیز جی جی، دعا بھٹو کے ہمراہ پریس کانفرنس کی ہے

پی ٹی آئی رہنما جانشیر جونیجو، علی میرجت، جام فاروق ،راکیش کمار و دیگر بھی موجود تھے

حلیم عادل شیخ نے انصاف ہاؤس میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا، ” شہید محترمہ کی برسی کا لاڑکانہ میں جلسہ منعقد کیا گیا

افسوس اس برسی کے اسٹیج پر ایک بھی بھٹو نہیں،آج ضیاء الحق کی باقیاتِ اسٹیج پر موجود تھی

بھٹو کے لاڑکانہ والے لاوارث ہوچکے ہیں، بلاول زرداری جعلی وصیت کے ذریعے لیڈر بن گئے

آج کے جلسے میں سندھ کی عوام کو بتانا گوارا نہیں سمجھا کہ پی پی نے 13 سال میں بی بی کے قاتلوں کو گرفتار کرنے کے لیے کیا کیا

عوام کو بتایا جاتا کہ بی بی کے قاتل کہاں گئے

بلاول اپنی تقریر میں کیوں نہیں بتاتے محترمہ کے قاتل گرفتار کیوں نہیں ہوئے

آج جلسے میں عوام کو اصلی وصیت دکھائی جاتی ہے جس کے ذریعے شہیدوں کی پارٹی زرداری گروپ کو منتقل کی گئی

آج لاڑکانہ میں دودھ والا علی حسن زرداری امیر ہوگیا ہے، آج بھٹو کی جگہ زرداریوں نے لے لی ہے

لاڑکانہ سمیت سندھ میں کتے بچوں کو کھا رہے ہیں، ویکسین کے لیے سندھ حکومت کے پاس پیسے نہیں،لاڑکانہ میں کووڈ کے دوران ادویات بیچی گئی، ہزارو‍ں بچے تھر میں مرگئے، آج کے جلسے میں بلاول نے جواب کیوں نہیں دیا

پورے سندھ کے مزارات بند ہیں، گڑھی خدا بخش کا مزار کھلا ہوا ہے، ایس او پیز پر بھی کوئی عمل نہیں دکھائی دہتا

اپنے دور حکومت میں بلاول نے ہماری سندھی اجرک اور ٹوپی کی تذلیل کی،آج سندھ میں کوئی سہولت موجود نہیں،یہ پاپا ڈیڈی مہم چلارہے ہیں

آج مولانا فضل الرحمان جواب دینے کی بجائے دھرنے کی بات کررہے ہیں،اس ملک اور فوج پر الله پاک کی رحمت ہے،مولانا عالم کا لبادہ اوڑھ کر ملک میں بغاوت پیدا کرنا چاہتے ہیں

نواز شریف نے مولانا اجمل قادری کو اسرائیل بھیجا،مولانا آج اسرائیل کو تسلیم کرنے والوں کے ساتھ ہیں، مولانا اپنے بھائی کو ڈی سی لگانا چاہتے ہیں،اس وجہ سے ان کے اختلافات شروع ہوچکے ہیں

پی ڈی ایم کی حقیقت سب کے سامنے آچکی ہے

سندھ میں کورونا سے لوگ مررہے ہیں،وزیراعلیٰ کے ڈرامے ختم نہیں ہورہے، ہم ہاتھ جوڑتے ہیں وزیراعلیٰ ڈرامے بند کریں

ہمیں چھوڑیں غلام قادر مری کا بیان ہی سن لیں

پیپلزپارٹی کے اندر ٹکڑے ہوچکے ہیں، یہ استعفیٰ دیکر تو دکھائیں کبھی نہیں دیں گے عوام کو بے وقوف بنا رہے ہیں

آج شہید رانی کی برسی پر بلاول اور پيپلز پارٹی کو معافی مانگنے کا دن تھا کیونکہ ان لوگوں نے ملک کو لوٹا ہے، عوام سے حقوق چھینے ہیں

آج کے جلسے کے لئے صرف شہر لاڑکانہ کی صفائی کیوں کی گئی؟

پورا سال لاڑکانہ میں گندگی کے ڈھیر ہوتے ہیں

لاڑکانہ کی شہریوں کو ایڈز لگا دیا گیا، سب سے زیادہ کتوں کے کاٹنے کے کیسز بھی لاڑکانہ میں ہیں، گندگی کے ڈھیر، گندا پانی بھی لاڑکانہ میں ہے

لاڑکانہ سمیت سندھ بھر کے اسکول، ہسپتال تباہ ہو گئے، بلاول آپ عوام کے سامنے جوابدہ ہیں

آپ کی پارٹی نے پورے سندھ کو تباہ کر دیا ہے، کراچی کی عوام کو کوئی سہولیات میسر نہی ہیں نہ ٹرانسپورٹ چلائی گئی، نہ گندگی کا خاتمہ کیا گیا، کراچی کی عوام کو ایک بوند پانی نہیں پہنچایا گیا

یہ موت، منگنیوں، شادیوں پر بھی بھتہ لیتے ہیں،لاشوں کے لیے ایمبولینسز نہیں جیالوں کو جلسے کے لیے ایمبولینس دی جارہی ہیں

سندھ والے ان کرپٹ لوگوں کو پہچانیں،27 دسمبر کو سانحے کے بعد پورے سندھ میں افراتفری پھیلائی گئی،کراچی میں فیکٹری جانے والی بچیوں کی عصمت دری کی گئ

لاڑکانہ کے 90 ارب کہاں خرچ ہوئے؟ 117 ارب کا حساب عوام مانگ رہی ہے لیکن بلاول نے کوئی جواب نہیں دیا”

رکن سندھ اسملی سعید آفریدی نے کہا،” پی ڈی ایم پاکستان دشمن موومنٹ بن چکی ہے،گھسیٹنے والے آج ایک اسٹیج پر ہیں،سندھ کی عوام ان سے جواب ضرور مانگیں گے

عزرا پیچوہو کے حلقے میں مالی انجیکشن لگارہے ہیں، سندھ کی عوام اب شعور رکھتی ہے، 12 سال سے ہسپتالوں پر تختیاں لگی ہوئی ہیں، اس ملک کا بچہ بچہ حساب لے گا،استعفیٰ دیکر اب کہتے ہیں غلطی ہوگئی”

رکن سندھ اسمبلی علی عزیز جی جی نے کہا،” ہمیں کمیٹی میں اعتماد میں نہیں لیا گیا، پولیس کمیٹی کی کوئی میٹنگ نہیں ہوئی، پولیس کا مورال ڈاؤن کیا گیا ہے

جنہوں نے استعفیٰ دیا ان کی رپورٹ بننی چاہیے اور ایکشن ہونا چاہیے،پولیس کمیٹی کی میٹنگ بلائی جائے”

sample-ad

Facebook Comments

POST A COMMENT.