غلنئی اے ایچ کیو ہسپتال میں آرتھوپیڈک آپریشن ملتوی

sample-ad

مہمند( افضل صافی) غلنئی اے ایچ کیو ہسپتال میں سہولیات کی عدم دستیابی کی وجہ سے آرتھو پیڈک آپریشنز دوسری بار بھی نہ ہو سکے

آپریشن کے لیے آنے والے مریض آپریشن کیے بغیر مایوس گھروں کو واپس چلے گئے

گزشتہ ہفتے ہسپتال میں پانی نہ ہونے اور آج آپریشن تھیٹر میں ائیرکنڈیشن خراب ہونے کی وجہ سے آپریشن نہ ہو سکے

مریضوں نے فریاد کی کہ وزیر صحت غلنئی ہسپتال کی اصلاح و احوال کریں

تفصیلات کے مطابق دہائیوں سے علاج معالجے سہولیات کی عدم دستیابی میں مشہور غلنئی ہیڈکوارٹر ہسپتال میں مختصر عرصہ سے آرتھوپیڈک آپریشن شروع ہوچکے تھے

جن سے علاقے کے عوام میں خوشی کی اُمید پیدا ہوگئی تھی کیونکہ مذکورہ ہسپتال میں چند مہینوں سے ہفتہ میں ایک بار آتھوپیڈک آُپریشن شروع ہو چکے تھے

مگر گزشتہ ہفتہ ہسپتال میں پانی کی عدم دستیابی اوراس بار آپریشن تھیٹرمیں آئرکنڈیشن کے خراب ہونے سےآپریشن نہ ہوسکے جبکہ آپریشن کیلئے حاضر مریضان اس بار بھی آپریشن ملتوی ہونے سے مایوس گھروں کو واپس لوٹ گئے

یاد رہے کہ غلنئی ہسپتال پر قومی خزانے سے ہر ماہ کروڑوں روپے خرچ ہورہے ہیں اور سرکاری کاغذات میں نام نہاد عہدوں پر مختلف ماہرین ڈاکٹرز تعینات ہیں

مگر غلنئی ہیڈکوارٹر ہسپتال سمیت علاقے کی صحت مراکز کے صورتحال ناگفتہ بہ ہے اور عوام پرائیویٹ مسیحاوٗں سے اپنے علاج کرنے پر مجبور ہیں

sample-ad

Facebook Comments

POST A COMMENT.