ٹھٹھہ میں پی ٹی آئی کارکنان کے خلاف سندھ حکومت کی انتقامی کاروائیاں جاری

sample-ad

گھوڑا باڑی میں کھاٹی شاخ زرعی پانی کی مصنوعی قلت کے خلاف اپوزیشن لیڈر سندھ اسمبلی حلیم عادل شیخ کے سامنے احتجاج کرنے پر مقامی آبادگاروں اور پی ٹی آئی ورکرز پر مقدمے درج اپوزیشن لیڈر سندھ اسمبلی حلیم عادل شیخ نے ایک ماہ قبل ٹھٹھہ میں کھاٹی نہر کا دورہ کرکے متاثرین کے احتجاج میں شرکت کی تھی

اس وقت متاثرین نے بتایا تھا کہ علی حسن زرداری نے کئی عرصے سے پانی بند کیا ہوا ہے پانی بند کرکے زمینیں بنجر بناکر سستے داموں علی حسن زرداری خریدنا چاہتے ہیں نہر کو بنانے کے لیے بھی کروڑوں روپے کی کرپشن کی گئی تھی

جس کے بعد احتجاج کے سربراہ رئیس محمد خان رند کے خلاف علی حسن زرداری نے ایریگیشن عملے کے ساتھ ملکر مقدمہ درج کرادیا

جھوٹے مقدمات کے خلاف پی ٹی آئی ٹھٹھہ کے صدر ارسلان بروہی کی قیادت میں احتجاجی ریلی نکالی گئی ریلی میں پی ٹی آئی رہنمائوں کارکنوں سمیت مقامی آبادگاروں نے تعداد میں شرکت کی احتجاجی ریلی ٹھٹھہ سے ایدھی سینٹر تک نکالی گئی ریلی کے شرکاء کی جانب سے علی حسن زرداری اور سندھ حکومت کے خلاف سخت نعرے بازی کی گئی

پی ٹی آئی ٹھٹھہ کے صدر ارسلان بروہی نےریلی کے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کہا اگر مقدمات کا سلسلہ ختم نہ ہوا تو ٹھٹھہ سے بلاول ہاؤس تک پیدل مارچ کیا جائے گا

علی حسن زرداری تاریخی شہر ٹھٹھہ کو زرداری اسٹیٹ بنانا چاہتے ہیں کاشتکاروں کی زمینوں کے پانی بند کرکے انہیں بنجر بنایا جارہا ہے زمینیں بنجر بناکر علی حسن زرداری سستے داموں خریدنا چاہتے ہیں

یزیدی کردار ادا کرنے میں محکمہ ایریگیشن اپنا بھرپور کردار ادا کرہا ہےعوام کے لیے بنے ہوئے ادارے ایک شخص کی غلامی کررہے ہیں

انتظامیہ اور علی حسن زرداری کا ٹھٹھہ کو فتح کرنے کا خواب پورا نہیں ہوگا،اگر انہوں نے قبلا درست نہیں کیا تو بلاول ہاؤس کا گھیراؤ کریں گے۔ پی ٹی آئی کاشتکاروں کے ساتھ ہے

sample-ad

Facebook Comments

POST A COMMENT.